Story

A Short Islamic Story About Friendship with Allah | Urdu

کوئی بزرگـــ تھے۔

ان کـــے پاس ایک دفعـــہ ایکـــ طالبـــ علـــم آیا جو دینـــی علـــوم سیکھتـــا رہا۔ کچھ عرصـــہ پڑھنـــے کے بعـــد جب وہ اپنے وطـــن واپـــس جانے لگا تو وہ بزرگـــ اس سے کہنے لگے:
میـــاں ایک بات بتاتـــے جاؤ۔
وہ کہنـــے لگا دریافتـــ کیجئـــے۔ مـــیں بتانـــے کے لیـــے تیـــار ہوں۔ وہ کہنـــے لگے اچھـــا یہ تو بتـــاؤ کیا تمہـــارے ہاں شیطـــان بھی ہوتا ہـــے؟

وہ کہنـــے لگا حضـــور شیطـــان کہاں نہیـــں ہوتا۔
شیطـــان تو ہـــر جگـــہ ہوتاہے۔
انہـــوں نے کہا:
اچھـــا جب تم نـــے خـــدا تعـــالیٰ سے دوستـــی لگانی چاہی اور شیطـــان نے تمہیں ورغـــلا دیا تو تم کیـــا کرو گـــے؟
اس نے کہا میں شیطـــان کا مقـــابلہ کروں گا۔
کہنـــے لگے :فـــرض کرو تم نـــے شیطـــان کا مقـــابلہ کیا اور وہ بھاگـــ گیا،
لیکن پھـــر تم نـــے اللـــہ تعـــالیٰ کے قـــرب کے حصـــول کے لئے جدوجہـــد کی اور پھر تمہـــیں شیطـــان نے روکـــ لیا تو کیا کرو گـــے؟
اس نے کہا: میں پھر مقـــابلہ کـــروں گا وہ کہنے لگـــے اچھـــا مان لیـــا تم نےدوســـری دفعـــہ بھی اسے بھـــگا دیا۔

لیکن اگر تـــیسری دفعـــہ وہ پھـــر تم پر حملـــہ آور ہو گیا اور اس نے تمہیں اللـــہ تعـــالیٰ کے قـــرب کی طـــرف بڑھنـــے نہ دیا توکیا کـــرو گے؟
وہ کچھ حـــیران سا ہو گیـــا مگـــر کہنـــے لگا: میـــرے پاس ســـوائے اس کے کیا عـــلاج ہـــے کہ مـــیں پھر اس کا مقـــابلہ کروں۔

وہ کہـــنے لگـــے: اگـــر ســـاری عمـــر تم شیطـــان سے مقـــابلہ ہی کـــرتے رہو گے تو خـــدا تک کب پہنچـــو گے۔ وہ لاجـــواب ہو کر خامـــوش ہو گیا۔

اس پـــر اس بزرگـــ نے کہا کہ اچھـــا یہ تو بتـــاؤ اگـــــر تم اپنے کســـی دوستـــ سے ملنـــے جـــاؤ اور اسنـــے ایک کتـــا بطـــور پہـــرہ دار رکھـــا ہوا ہو اور جبـــ تم اس کے دروازہ پر پہنچـــنے لگو تو وہ تمہـــاری ایـــڑی پکـــڑ لے تو تم کیا کـــرو گے؟
وہ کہنـــے لگا کتـــے کو مارونـــگا اور کیا کـــرونگا۔

وہ کہنـــے لگے: فـــرض کرو تـــم نے اســـے مارا اور وہ ہٹـــ گیا لیکـــن اگر دوبارہ تـــم نے اس دوست ســـے ملنے کے لئے اپنا قـــدم آگے بڑھـــایا اور پھر اس نے تمہیں آ پکـــڑا تو کیا کرو گے؟
وہ کہنے لگا: میں پھـــر ڈنـــڈا اٹھـــاؤں گا اور اسے ماروں گا۔
انہوں نے کہا اچھا تیســـــــری بار پھر وہ تم پر حملـــــــہ آور ہو گیـــا تو تم کیا کرو گے؟

وہ کہنے لگا: اگر وہ کسی طـــــــرح باز نہ آیا تو میں اپنے دوستـــــــ کو آواز دوں گا کہ ذرا باہـــر نکلنـــــــا۔ یہ تمہارا کتـــــــا مجھے آگے بڑھنـــے نہیـــــــں دیتـــا اسے سنبھـــــــال لو۔

وہ کہنـــے لگـــے:
بـــس یہـــی گُر شیطـــــــان کے مقـــــــابلہ میں بھی اختـــــــیار کرنا اور جب تـــم اس کی تدابیـــــــر سے بـــــــچ نہ سکو تو خـــــــدا سے یہی کہنـــا کہ وہ شیطـــــــان کو روکـــے اور تمہـــــــیں اپنے قـــــــرب میں بڑھنـــــــے دے۔۔۔

Tags

Saifullah Aslam

I'm the Founder and admin of this website. Studying for MPhil IT's degree, working as a Web Developer at a well-known software house in Lahore, Pakistan and have a good professional experience in Graphic Designing. I'm enjoying to write the articles on this blog.

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button
Close
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker