News

16 million pounds shopping woman

ضمیرہ حاجی ایوا: 16 ملین پاؤنڈ کی شاپِنگ کرنے والی خاتون کو املاک ضبط ہونے کا خطرہ

لندن کے مہنگے ترین شاپنگ مالز میں سے ایک ہیرڈز میں 16 ملین پاؤنڈز اڑانے والی خاتون نیشنل کرائم ایجنسی کے خلاف اپنی اپیل ہار گئی ہیں جس کے بعد وہ لندن کے مہنگے علاقے میں اپنا عالیشان گھر گنوا سکتی ہیں۔

ضمیرہ حاجی ایوا برطانیہ میں انسداِدِ بدعنوانی کے قانون ‘ان ایکسپلینڈ ویلتھ آرڈر’ (وہ دولت جس کی وضاحت نہ کی گئی ہو) کی زد میں آنے والی پہلی فرد ہیں اور لندن میں اپنا 15 ملین پاؤنڈ کا گھر اور ایک گالف کورس بچانے کی کوشش کر رہی ہیں۔

ضمیرہ حاجی ایوا کو یہ بتانا ہوگا کہ ان کے پاس اتنی دولت کہاں سے آئی جس سے انہوں نے ہیرڈز کے نزدیک ایک بنگلہ اور برک شائر میں ایک گولف کورس خریدا۔

ضمیرہ حاجی ایوا کے شوہر ایک بینکر ہیں اور غبن کے جرم میں آذربائیجان کی جیل میں قید ہیں۔ یہ دونوں میاں بیوی کسی بھی طرح کے غلط کام کی تردید کرتے ہیں اور ضمیرہ حاجی ایوا پر برطانیہ میں ابھی تک کسی معاملے میں فرد جرم عائد نہیں کی گئی ہے۔

بدھ کو ان کی اپیل کو مسترد کرتے ہوئے جج نے ضمیرہ حاجی ایوا کو یہ کیس سپریم کورٹ میں لے جانے کی اجازت نہیں دی اور ساتھ ہی انہیں نیشنل کرائم ایجنسی کی جانب سے مقدمے پر ہونے والے خرچے کی ادائیگی کا حکم بھی دیا۔

اپنے فیصلے میں لارڈ جسٹس برنیٹ اور دیگر دو سینیئر ججوں نے کہا کہ ضمیرہ حاجی ایوا پر انسداِدِ بدعنوانی کے نئے قانون ‘ان ایکسپلینڈ ویلتھ آرڈر’ (وہ دولت جس کی وضاحت نہ کی گئی ہو) کے تحت کارروائی درست تھی۔

اس نئے قانون کے تحت عدالت کو یہ اطمینان کرانا ضروری ہوتا ہے کہ کسی پر یہ شبہہ کرنے کے مناسب شواہد موجود ہیں کہ اس نے جو املاک خریدی ہیں وہ اس کی آمدنی سے مطابقت نہیں رکھتیں۔

اب آگے کیا ہوگا

اب ضمیرہ حاجی ایوا کے پاس سات دن ہیں جس دوران انہیں نیشنل کرائم ایجنسی کو اپنی دولت اور آمدنی کی تفصیلات مہیا کرنی ہوں گی اور اگر وہ ایسا نہیں کر سکیں تو ایجنسی ان کے اثاثے منجمد کر سکتی ہے۔

اگر وہ اپنی آمدنی کی تفصیلات مہیا کر دیتی ہیں تو پھر ایجنسی 60 دنوں میں ان کا جائزہ لیکر یہ فیصلہ کرے گی کہ آیا یہ تفصیلات جائز ہیں یا ان کے اثاثے منجمد کیے جانے چاہییں۔

اگر ایجنسی کو لگا کہ یہ اکاؤنٹس جعلی یا جھوٹے ہیں تو ان پر مقدمہ چلا کر انہیں جیل بھیجا جا سکتا ہے۔


Automatic Translated By Google

The woman, who raised £ 16m in herds at one of London’s most expensive shopping malls, lost her appeal against the National Crime Agency after which she could lose her luxurious home in the expensive London area.

Zamira Haji Eva is the first person in the UK to fall under the anti-corruption law ‘The Expland Wealth Order’ (a wealth that is not defined) and attempts to save her £ 15m home and a golf course in London. Are doing

Zamara Haji Eva has to explain where he got the money from which he bought a bungalow near Herds and a golf course in Berkshire.

What will happen next

Now Haji Eva has seven days during which he will have to provide his wealth and income details to the National Crime Agency, and if he cannot do so, the agency may freeze his assets.

If they provide details of their income, then the agency will review them within 60 days to decide if those details are valid or whether their assets should be frozen.

If the agency finds these accounts to be fake or false, they can be prosecuted and jailed.

Tanveer Ahmad

I'm a web desk author & covering national including international news and articles for SayfJee. Also, provide the sports updates regularly.

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker