Live News HD

Why is the Japanese nation talking to trees, is it crazy?

جاپانی قوم درختوں سے باتیں کیوں کرتی ہے، کیا وہ پاگل ہے؟

کیا کبھی آپ نے کِسی کو پودوں اور درختوں سے باتیں کرتے دیکھا ہے؟ یقیناً نہیں دیکھا ہوگا۔ لیکن کیا آپ جانتے ہیں کہ دنیا میں ایک ایسا ملک بھی ہے جہاں کے لوگوں کا یہ ماننا ہے کہ جنگلات میں درختوں کے ساتھ کچھ وقت گزار کے انہیں اپنے اندر ذہنی تناؤ کافی حد تک کم ہوتا محسوس ہوتا ہے۔

جاپان کے لوگوں کے مطابق یہ ان کی قدیم روایت ہے کہ درختوں کے بیچ میں جا کر آنکھیں بند کریں اور پِھر لمبا گہرا سانس لیا جائے۔ اِس سے ایسا محسوس ہوتا ہے کہ ان کی تمام پریشانیاں ختم ہوگئیں۔ وہاں کے لوگوں کا ماننا ہے کہ درختوں اور پودوں سے باتیں کرنا ان کی دِماغی صحت کے لیے اچھا ہے۔ ایسا کرنے سے ایک طمانیت کا احساس ہوتا ہے جبکہ جسم بھی کافی ہلکا پھلکا محسوس ہوتا ہے۔

جاپان سے تعلق رکھنے والے جنگلات کے ماہر ڈاکٹر کنگ لی کے مطابق 1980 کی دہائی میں بہت سارے عناصر ایسے تھے جو یہاں کے افراد کے لیے ذہنی دباؤ کی وجہ تھے جبکہ اب اس میں کافی بہتری آئی ہے۔ ذہنی دباؤ وہ بیماری ہے جو دیگر کئی بیماریوں کی وجوہات بنتی ہے۔ انہوں نے کیا کہ مجھے لگتا ہے یہ عمل کافی حد تک دماغی صحت کو بہتر بنانے میں مدد فراہم کرتا ہے۔


Automatic Translated By Google

Have you ever seen someone talk to plants and trees? Must have never seen. But did you know that there is also a country in the world where people believe that spending some time with the trees in the forest makes them feel less stressed?

According to the Japanese people, it is their ancient tradition to close their eyes between the trees and take a deep breath. It feels like all their worries are gone. People there believe that talking to trees and shrubs is good for their mental health. Doing so gives a sense of satisfaction while the body also feels quite lightweight.

According to Dr. King Lee, a forests expert from Japan, there were many elements in the 1980s that caused depression for the people here, and now it has improved considerably. Mental depression is a disease that is the cause of many other diseases. He said that I think this process helps improve mental health to a great extent.

Tanveer Ahmad

I'm a web desk author & covering national including international news and articles for SayfJee. Also, provide the sports updates regularly.

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button
Close