News

Indians Called Modi A Liar – Report

بھارتیوں نے مودی کو جھوٹا قرار دے دیا

کبھی نیپال کے ہاتھوں پسپائی، کبھی لداخ میں ہوئی خوب پٹائی، مودی نے بھارت کا مذاق بنوا دیا

نئی دہلی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – این این آئی۔ 21 جون2020ء) بھارتیوں نے مودی کو جھوٹا قرار دے دیا۔بھارتی فوجیوں اور شہریوں کی دھلائی پر بھارتیوں نے کہاکہ کبھی نیپال کے ہاتھوں پسپائی، کبھی لداخ میں ہوئی خوب پٹائی،مودی نے بھارت کو مذاق بنا دیا،کیا اس دِن کیلئے ہم نے قربانیاں دیں۔دوسری جانب بھارتی صحافی نے چیف آف ڈیفنس اسٹاف جنرل راوت کو کھلا خط لکھا ہے جس میں لداخ میں ناکامی پر کئی سوالات اٹھا دیئے، ہم مسلح افواج کے خدمت گار اور ریٹائرڈ اہلکاروں کے اہل خانہ اپنے فوجیوں ، اپنی فوج کے ساتھ ثابت قدم ہیں۔
خط میں کہاگیاکہ ہم اپنے مردوں کی سلامتی کے لئے دعاگو ہیں لیکن ہمیں یہ جاننے کی ضرورت ہے کہ وادی گالان میں کیا ہوا ہے۔خط میں کہاگیاکہ میں سمجھتا ہوں کہ عوامی ڈومین میں اسٹریٹجک فیصلے یا نتائج کو اشتراک نہ کرنے کی کچھ وجوہات ہیں لیکن ایک انتہائی متحرک سوشل میڈیا کے ساتھ ، بہت سارے متضاد بیانات اور خوفناک تصویروں کے چکر لگانے سے ، ہم کہاں جائیں گے ، ہمیں کس پر اعتماد ہی اگر چین کی طرف سے مداخلت نہ کی گئی تو ہم کمانڈنگ آفیسر سمیت بہت سے جانی نقصان کیسے برداشت کر سکی نہ صرف ہمارے فوجیوں کو وحشیانہ طور پر ہلاک کیا گیا ، بلکہ ان کی لاشیں مسخ کردی گئیں کیوں خط میں کہاگیاکہ کیا وہ اپنے طور پر دشمن کے علاقے میں داخل ہوئے (جیسا کہ چین نے دعوی کیا ہی) اور دفاع میں حملہ ہوا ہم وہاں لداخ ڈیزاسٹر میں روزانہ ایک نیا اسپن کیوں رکھتے ہیں کیا ہمیں کبھی حقیقت معلوم ہوگی کیا ہمارے فوجی اپنے ہی بچھائے ہوئے جال میں گر گئی ہمارے فوجی توپ کا چارہ نہیں ہیں ، سفارتی فوائد کے لئے ان کا قصہ نہیں رکھا جاسکتا۔

خط میں کہاگیاکہ جتنا پاگل ہوسکتا ہے ، چینی فوج سے زیادہ ، یہ آپ ہی ہیں جو ہم سے زیادہ سخت ہیں، آپ کی اپنی پالیسیاں ، آپ کی ہدایت اور اس کے ساتھ خود کے ساتھ واضح زوجہ مادر سلوک وہی ہے جو ہمیں زیادہ سے زیادہ فکر مند ہے۔ جب چیف آف ڈیفنس اسٹاف کا عہدہ تشکیل دے دیا گیا اور بتایا گیا کہ تمام سہ رخی خدمات ، ہندوستانی فوج ، بحریہ اور ایئرفورس ایک چھتری کے نیچے آئیں گے تاکہ ہندوستان کو بہتر تحفظ حاصل ہو، ہم نے تمام محاذوں پر زیادہ محفوظ محسوس کیا لیکن جو کچھ ہو رہا ہے اس کے بالکل مخالف ہے،ہمیں داخلی اور بیرونی طور پر ایک مشکل وقت کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔
اگرچہ ملک کا ہر شہری ہمارے فوجیوں کے ساتھ کھڑا ہے ، لیکن ہماری مسلح افواج کے ممبران آپ کی مداخلتوں کی وجہ سے زیادہ حد تک نہیں ہیں، خط میں کہاگیاکہ ۔ لداخ کی تباہی نے یہ واضح کر دیا کہ آپ کی مستقل مداخلت کی وجہ سے ، تقویم پار ہندوستانی فوج کے مختلف ہیڈ کوارٹرز کس طرح اپنے تمام اختیارات سے کٹ گئے ہیں، گذرگاہوں میں سرگوشیوں کی آوازیں اب ہمارے فوجیوں کو مستقبل میں کسی بھی ایسے فاسق سے بچانے کی چیخیں ہیں، ہم نے اپنے مردوں کو غیر منظم طریقے سے کھویا اور زمینی حقیقت کو چھپانے کے ل کور اپ کے بعد بڑے بڑے احاطے موجود ہیں،ان کا لہو سیاسی فیصلہ سازوں کے ہاتھوں میں اور آپ کے بھی بہت حد تک ہوسکتا ہی! خط میں کہاگیاکہ یہ یقینی طور پر آپ کے جیسے ہی گاؤں سے ایک حکومت میں ایک طاقتور گاڈ فادر ہونا ایک اچھا احساس ہوگا۔
کوئی ، جو آپ کی حفاظت کرتا ہے ، آپ کو دوسرے بہترین مقام سے آگے بڑھا کر ترقی دیتا ہے ، آپ کے لئے ایک کشش اپوائنٹمنٹ کا رواج بنایا گیا ہے تاکہ آپ طویل عرصے تک اپنے ملک کی خدمت کرسکیں۔ لاجواب! ہر ایک اتنا مبارک نہیں ہوتا،حکومت میں اس قدر مضبوط تعلق اور اس کی ناقابل یقین طاقت سے ، ذرا تصور کیج the کہ اس تنظیم کو کتنی خوبصورتی سے فائدہ ہوا ہوگا ، اگر صرف ، آپ خود کو زیتون کے سبزوں کے اس خاندان کا حصہ سمجھتے ہیں۔
لیکن آپ نے باس کا حصہ ادا کرنے کو ترجیح دی جو ان کی بنیادی باتوں میں سے اپنی ہی چیزیں اتارنا پسند کرتا تھا۔خط میں کہاگیاکہ ایک بار برائے مہربانی اپنے دل پر ہاتھ رکھیں اور غور کریں، کیا آپ نے جو ذمہ داریوں اور مراعات آپ سے دی ہیں ان کے ساتھ انصاف کیا کیا آپ بازوؤں میں اپنے بھائیوں کے لئے کھڑے ہوئے ہیں، کیا آپ نے سیاست دانوں کو آپ کو قربانی کا بکرا بنانے نہیں دیا اور کچھ فیصلے کرنے نہیں دیئے جس سے تنظیم کو ہمیشہ نقصان پہنچا کیا آپ نے لداخ میں ہمارے فوجیوں کو ناکام نہیں کیا مجھے یقین ہے کہ آپ جوابات کو جانتے ہوں گے۔
کبھی اپنے پاؤں کو مضبوطی سے زمین پر رکھنا اپنے لڑکوں کے خلاف لڑنے اور مناسب حفاظتی پوشاک کے باوجود ذیلی صفر درجہ حرارت میں ہلاک ہونے پر سوچا۔ ہاں ، پھر آگے بڑھیں یہ کریں ، ہم آپ کے ساتھ یکجہتی میں کھڑے ہیں نہیں پھر اخلاقی بنیادوں پر استعفیٰ دینے کا کیا ہوگا ،اگرچہ ہم اپنے فوجیوں کے ساتھ کھڑے ہیں اور جب وہ جنگ کے لئے جاتے ہیں تو پپوٹا سے نہیں بیٹھیں گے ، ہم آپ سے درخواست کرتے ہیں کہ وہ اس بات کو یقینی بنائیں کہ ان کو دھوکہ نہ دیا جائے ، نہ اسلحے سے پاک ہونے کا کہا جائے اور نہ ہی ہتھیار استعمال کریں گے ، ہم یقینی طور پر ان کو نہیں چاہتے ہیں جس طرح وہ چین کے ذریعہ تھے قصاص بنائیں۔نہیں!!لداخ کو گیم چینجر بننے دو۔


Indians Called Modi A Liar

New Delhi (Urdu Point newspaper latest – NNI. June 21, 2020) Indians called Modi a liar. On the other hand, an Indian journalist has written an open letter to the Chief of Defense Staff General Rawat in which he raised many questions about the failure in Ladakh. We, the Armed Forces servants and retired personnel K’s family is steadfast with their soldiers, their army.
“We pray for the safety of our men, but we need to know what happened in the Galan Valley,” the letter said. With a highly dynamic social media, circling so many contradictory statements and horrifying images, where will we go, who do we trust, how can we bear so many casualties, including the commanding officer, if not intervened by China? Not only were our soldiers brutally killed, but their bodies were mutilated because the letter stated whether they had entered enemy territory on their own (as claimed by China) and attacked in defense. Why do we have a new spin every day in the Ladakh disaster? Will we ever know the truth? Our soldiers have fallen into their own trap. Our soldiers are not the fodder of the cannon. Their story cannot be told for diplomatic gain.

The letter said that as crazy as it may be, more than the Chinese military, it is you who are tougher than us, your own policies, your guidance and with it a clear wife-mother treatment is what makes us the most. Is worried When the post of Chief of Defense Staff was created and it was said that all trilateral services, Indian Army, Navy and Air Force would come under one umbrella to give India better protection, we felt safer on all fronts but Quite the opposite of what is happening, we are facing a difficult time internally and externally.
Although every citizen of the country stands with our troops, the members of our armed forces are not largely due to your interference, the letter said. The devastation of Ladakh made it clear how due to your constant intervention, the various headquarters of the Indian Army across the calendar have been cut off from all their powers. There are screams to save us, we have lost our men in an unorganized manner and there are huge compounds after the cover-up to hide the ground reality, their blood could be in the hands of political decision makers and to a great extent yours too. Hey! The letter said that it would definitely be a good feeling to have a powerful godfather in a government from a village like yours.
Someone who protects you, promotes you beyond the best of other places, has made an attractive appointment for you so that you can serve your country for a long time. The answer! Not everyone is so happy, with such a strong connection to the government and its incredible power, just imagine how beautifully this organization would have benefited, if only, you were part of this family of olive groves. Understand.
But you preferred to play the part of the boss who liked to take his own things out of their basics. The letter said that once you put your hand on your heart and consider, what responsibilities and privileges did you have? Have you done justice to them? Have you stood up for your brothers in arms? Have you not allowed politicians to make you a scapegoat and allow you to make some decisions that have always harmed the organization? Has not failed our troops in Ladakh I am sure you will know the answers.
Ever thought of keeping your feet firmly on the ground, fighting against your boys and dying in sub-zero temperatures despite proper protective clothing. Yeah Al that sounds pretty crap to me, Looks like BT aint for me either, Looks like BT aint for me either, Looks like BT aint for me either, Looks like BT aint for me either, Looks like BT aint for me either, Looks like BT aint for me either, Looks like BT aint for me either, Looks like BT aint for me either. We urge you to make sure that they are not deceived, that they are not told to disarm and that they do not use weapons. We certainly do not want them to be like China. Make qisas. No !! Let Ladakh become a game changer.

Tags

Saifullah Aslam

Owner & Founder of Sayf Jee Website

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button
Close