Live News HD

The Government’s decision to make locusts a source of income | Report

نیشنل فوڈ سیکیورٹی اینڈ ریسرچ کے تحت شروع ہونے والے اس پروگرام کے ذریعے ٹڈی دل سے متاثرہ کسانوں کی مالی مدد ہوگئی، جبکہ ان ٹڈیو ں اور جانوروں کے فضلے کو مکس کرکےکھاد بھی تیار کی جائے گی

حکومت کا ٹڈی دل کو ذریعہ آمدن بنانے کا فیصلہ

حکومت نے ٹڈی دل کو ذریعہ آمدن بنانے کا فیصلہ کر لیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق نیشنل فوڈ سیکیورٹی اینڈ ریسرچ کے تحت شروع ہونے والے اس پروگرام کے ذریعے ٹڈی دل سے متاثرہ کسانوں کی مالی مدد ہوگئی، جبکہ ان ٹڈیو ں اور جانوروں کے فضلے کو مکس کرکےکھاد بھی تیار کی جائے گی۔ اس حوالے سے میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ اس سے ایسی کھاد تیار کی جائے گی جس میں ں 9 فیصد نائٹروجن اور 7 فیصدفاسفورس موجود ہوگا جو کہ زراعت کے لئے بہت مفید ہیں۔
ابتدائی طور پر تھل اور چولستان میں اس پروگرام کا افتتاح کیا جائے گا اور اس مقصد کے لئے حکومت کسانوں کو ٹریننگ بھی دی گئی اور کولیکشن سنٹر بھی بنا دیئے جائیں گے جہاں کسان آ کر ٹڈی دل جمع کروا سکیں گے۔

حکومتی اعلانیے کےمطابق اس سے کسانوں کی پیداوار میں 15 فیصد اضافہ ہو گا جبکہ دوسری کھادوں کے استعمال میں 25 فیصد کمی آئے گی۔ مزید بتایا گیا ہے کہ 1لاکھ ٹن ٹڈیوں سے 70 ہزار ٹن کھاد تیار کی جاسکتی ہے، ایک اندازے کے مطابق ٹڈیوں سے 1 بلین کی کھاد تیار کی جاسکتی ہے، اور اس پروگرام کے تحت ایک خاندان کو ماہانہ 6 ہزار روپے کی آمدن ہوگی۔

خیال رہے کہ پاکستان میں اس وقت ٹڈیوں کا حملہ جاری ہے جس سے فصلوں کے بڑے پیمارے پر تباہ ہونے کا خدشہ پیدا ہو گیا ہے۔ اس کے علاوہ گزشتہ روز تحریک انصاف کے رکن قومی اسمبلی ریاض فتیانہ نے کہا ہے کہ ٹڈیوں کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ اس کوکھانے سے کورونا ختم ہوسکتا ہے، ان کا کہنا تھا کہ حکومت ٹڈیوں کے حوالے سے تحقیق کرا لے،اگریہ حقیقت ہے کہ ٹڈیوں کے کھانے سے مضبوط قوت مدافعت پیدا ہوتی ہے تو قوم ٹڈیوں کا خود ہی تیا پانچا کردے گی


The Government’s decision to make locusts a source of income

Launched under the National Food Security and Research Program, the program has provided financial support to locust-affected farmers, while compost will also be made by mixing locusts and animal waste.

ISLAMABAD: The government has decided to make the locust heart a source of income. According to details, the program, launched under the National Food Security and Research, has provided financial assistance to locust-affected farmers, while compost will also be prepared by mixing locusts and animal waste. According to media reports, it will produce a fertilizer that will contain 9% nitrogen and 7% phosphorus, which are very useful for agriculture.
Initially, the program will be inaugurated in Thal and Cholistan and for this purpose the government has provided training to the farmers and also set up collection centers where the farmers will be able to come and collect locusts.

According to a government announcement, it will increase farmers’ production by 15 per cent and reduce the use of other fertilizers by 25 per cent. It was further stated that 70,000 tons of manure can be produced from 100,000 tons of locusts, an estimated 1 billion manure can be produced from locusts, and under this program a family will have a monthly income of Rs. 6,000.

It may be recalled that locusts are currently attacking Pakistan, which has led to fears of large-scale destruction of crops. Also yesterday, PTI National Assembly member Riaz Fatyana said that locusts are said to be eaten by corona, adding that the government should investigate the locusts, if it is true. If eating locusts builds strong immunity, then the nation will prepare locusts by itself.


News Source: Urdu Point

Tags

Saifullah Aslam

Owner & Founder of Sayf Jee Website

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker